img 1614056830 5

نظام عدل کو مذاق بنا دیا گیا ہے ،چیف جسٹس اسلام آبادہائیکورٹ کے ساتھ زیادتی کا دفاع نہیں کیا جاسکتا،شاہد خاقان عباسی- روزنامہ اوصاف

اسلام آباد(روزنامہ اوصاف)سابق وزیراعظم شاہدخاقان عباسی نے کہا ہے کہ حکومت خود الیکشن چوری کررہی ہے،ڈسکہ میں جو کچھ ہوا وہ سب کے سامنے ہے ،بیلٹ باکس کیساتھ عملے کو بھی چوری کرلیا گیا،دس وفاقی وزرا کیخلاف کیس عدالتوں میں پڑے ہیں ان کو نہیں سنا جارہا ،نظام عدل کا مذاق بنا دیا گیا ہے ،چیف جسٹس اسلام آبادہائیکورٹ کے ساتھ جو زیادتی ہوئی اس کا دفاع نہیں کیا جاسکتا ،وکلا کے چیمبرز کیلئے جگہ مہیا کی جانی چاہیے۔میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شاہد خاقان عباسی نے کہاکہ اسلام آباد میں عدلیہ کے بائیکاٹ ٹھیک نہیں ہے ،
 

انہوں نے کہاکہ وکلا کو چیمبرز کیلئے جگہ دی جانی چاہیے تاکہ وہ اپنی پریکٹس جاری رکھ سکیں اور عدالتوں میں کام شروع ہو سکے ،سائلین کو مشکلات نہ اٹھانی پڑیں ۔انہوں نے کہاکہ ایسے حالات پیدا کردیئے گئے ہیں کہ ملکی نظام درہم برہم ہوکر رہ گیا ہے ،عدالتیں بند پڑی ہیں ،حکومت خود چوری کررہی ہے اوربراڈ شیٹ کو دیکھ لیں یہ احتساب کا ادارہ خود کرپشن میں ملوث ہے ا ن کو کون پوچھے گا ؟انہوں نے کہا کہ عدالتوں میں دس سے زائد وفاقی وزرا کیخلاف کیس پڑے ہیں لیکن یہ بدنصیبی ہے کہ وہ نہیں سنے جارہے ہیں، عدل کا نظام کا مذاق بنا دیا گیا ہے ،اس لئے ہمیں بڑی سوچ سمجھ کر فیصلے کرنا ہوں گے ۔انہوں نے کہاکہ ملک کی بھی بڑی بدنصیبی ہے کہ موجودہ حکومت پارلیمان کو عزت نہیں دے رہی اور سینیٹ ا نتخابات میں بھی دھاندلی کرانا چاہتی ہے،ڈسکہ میں دیکھ لیں جو کچھ ہوا وہ بھی آپ کے سامنے ہے ،دھاندلی کے بعد نہ چیف سیکرٹری مل رہے تھے اور الیکشن کمیشن کے عملہ مل رہا تھا ، ان کے فون تک بند تھے ۔انہوں نے کہاکہ لوگ موجودہ حکومت کیساتھ اب نہیں چلنا چاہتے ، جو لوگ پارلیمان سے باہر وہ اس حکومت سے زیادہ تنگ ہیں ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں