img 1613996364 4

سکارکوئی کے عوام کیساتھ ظلم وزیادتی بندنہ ہوئی توسڑکوں پرنکلیں گے،سلطان رئیس- روزنامہ اوصاف

گلگت(وقائع نگار خصوصی) سابق امیدوار گلگت بلتستان اسمبلی حلقہ 1 گلگت مولانا سلطان رئیس نے کہا ہے کہ ماضی میں فرقہ وارانہ فسادات برپا کرکے گلگت بلتستان کو وزیرستان بنانے کی کوشش کی گئی اب تبدیلی حکومت ترقیاتی منصوبوں کو روک کر عوام میں افراتفری پھیلانے کی کوشش کی جارہی ہے اگر سکارکوئی کے عوام کے ساتھ ظلم و زیادتی بند نہ کی گئی تو عوامی سمندر

کے ساتھ سڑکوں پر نکل کر تبدیلی حکومت کے ناک میں دم کرنے پر مجبور ھونگے عوام تبدیلی کے لیئے سڑکوں پر نکلنے کی تیاری کریں انہوں نے سکارکوی میں عوامی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہم مانتے ہیں کہ مسلم مسلم لیگ ن کے دور حکومت میں گلگت بلتستان میں پائیدار قیام آمن کے ساتھ ترقیاتی کام بھی ہوے ہیں لیکن بدقسمتی سے تبدیلی حکومت مسلم لیگ ن دور کے میگا منصوبوں کو روکنے کی کوشش کررہی ہے سکارکوی بھی گلگت بلتستان کا حصہ ہے سکارکوی میں صحت مندانہ سرگرمیوں کے لیئے گراونڈ نہایت ضروری ہیں صوبائی حکومت فوری طور پر سکارکوی کے میگا منصوبوں سمیت نوجوانوں کے لیئے گراونڈ بنانے کے لیے اقدامات اٹھائیں بصورت دیگر سڑکوں پر نکلنے میں مجبور ھونگے انہوں نے کہا ہے کہ گلگت بلتستان کی تعمیر و ترقی آمن سے مشروط ہے پورے گلگت بلتستان کو امن کا گہوارہ بنانے کے لیئے گلگت شہر کو امن کا مرکز بنانا ہو گا کھلاڈی صحت مندانہ سرگرمیوں کے فروغ کے ساتھ پائیدار قیام آمن کے لیئے اپنا کلیدی کردار ادا کریں تاکہ پائیدار قیام آمن سے تعمیر و ترقی ممکن ہو اور گلگت بلتستان کے عوام تعمیر و ترقی سے خوشحالی کے راہ پر گامزن ہوں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں